Inspirational Shayari Two Lines – Urdu Poetry

Spread the love

Shayari Urdu is sharing Inspirational Shayari In Urdu Inspirational Shayari Two Lines Poetry. In this Magical Poetry collection, you will feel love and sadness both together.

Read and share the images of Inspirational Shayari Two Lines – Urdu Poetry by famous poets. Share your favorite Inspirational Shayari Two Lines on the web, Facebook, Twitter, Instagram, and blogs.

Farishte Se Barh Kar Hai Insaan Ban’na,

Magar Iss Mein Lagti Hai Mehnat Zyada

Inspirational Shayari

فرشتے سے بڑھ کر ہے انسان بننا
مگر اس میں لگتی ہے محنت زیادہ

 

Rooh Matti Se Ya Matti Rooh Se Tang Hai,

Dono Ke Beech Shayad Sukoon o Aman Ki Jang Hai

روح مٹی سے یا مٹی روح سے تنگ ہے
دونوں کے بیچ شاید سکون و امن کی جنگ ہے

 

Kaash Koi Toh Aesa Ho,

Jo Ander Se Bahar Jaisa Ho

کاش کوئی تو ایسا ہو
جو اندر سے باہر جیسا ہو

 

Ajnabi Ki Nazar Se Nazar Na Milao
Nazaron Se Aashiq Deewane Huye,

Apno Ki Nazar Ko Nazar Bhi Na Aao
Dekhte Dekhte Apne Bigane Huye,

Apni Hee Nazar Mein Nazar Band Ho Jao
Nazar e Bad Se Gulshan Weerane Huye

 

Ahmaqana Hai Dard Bayaa’n Karna,

Aqal Hai Zabt Ki Inteha Karna

احمقانہ ہے درد بیاں کرنا
عقل ہے ضبط کی انتہا کرنا

 

Koi Zindagi ki Azmaishon Se Guzara
Koi Ishq Ka Rog Laga Betha,

Koi Kalam Se Dard Likhne Laga
Koi Shayar Khud Ko Bana Betha

کوئی زندگی کی آزمائشوں سے گزرا
کوئی عشق کا روگ لگا بیٹھا

کوئی قلم سے درد لکھنے لگا
کوئی شاعر خود کو بنا بیٹھا

 

Rangeen Duniya Ke Rangeen Logon Mein, Naam Na Likh Mera

Tauba Karlunga, Marne Se Pehle Anjam Na Likh Mera

رنگین دنیا کہ رنگین لوگوں میں ،نام نہ لکھ میرا
توبہ کر لونگا، مرنے سے پہلے انجام نہ لکھ میرا

 

Logon Se Milta Tha Gham, Main Seh Na Saka,

Akela Rehna Chahta Tha Magar, Reh Bhi Na Saka

لوگوں سے ملتا تھا غم میں سہہ نہ سکا
اکیلا رہنا چاہتا تھا مگر رہ بھی نہ سکا

 

Kar Nafsi Khwahishat Puri Abhi Mann Kaala Nahi Hai,

Phir Andheron Mein Kar Gila Rab Kyun Ujala Nahi Hai

کر نفسی خواہیشات پوری ابھی من کالا نہیں ہے
پھر اندھیروں میں کر گلہ رب کیوں اُجالا نہیں ہے

 

Tarap Dekhani Parti Hai,

Tab Hee Toh Zam Zam Milta Hai

Mar Gaya Krishna, Mar Gaya Rama, Mar Gayi Seeta Bai,

Arey Poojan Uski Kariye Jisko Maut Na Aayi

 

مر گیا کررشنا، مر گیا راما، مر گئی سیتا بائی
ارے پوجن اس کی کرئیے جس کو موت نہ آئی

 

Neend Na Wekhe Bistra, Teh Bhuk Na Wekhe Maas,

Maut Na Wekhe Umar Nu, Teh Ishq Na Wekhe Zaat

نیند نہ ویکھے بسترا ، تے بھک نہ ویکھے ماس
موت نہ ویکھے عمر نوں ، تے عشق نہ ویکھے ذات

 

Badal Jaate Hain Woh Log Waqt Ki Tarah,

Jinhein Hadh Se Zyaada Waqt Diya Jaata Hai

بدل جاتے ہیں وہ لوگ وقت کی طرح
جنہیں حد سے زیادہ وقت دیا جاتا ہے

 

Na Zameen Apni Na Aasman Apna,

Duniya Mein Nahi Koi Maqam Apna

نہ زمین اپنی نہ آسمان اپنا
دنیا میں نہیں کوئی مقام اپنا

 

Jissey Dhundta Hai Mann Yahan Wahan,

Woh Toh Basta Hai Tute Huye Dil’on Mein

جس سے ڈھونتا ہے مَن یہاں وہاں
وہ تو بستا ہے ٹُوٹے ہوئے دِلوں میں

 

Waqt Halaat Aur Zindagi,

Insan Ko Badal Dete Hain

وقت ، حالات اور زندگی
انسان کو بدل دیتے ہیں